حضرت مولانا محمد اکرم اعوان رحمۃ اللہ علیہ کی پیشگوئیاں

شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ "حضرت مولانا محمد اکرم اعوان رحمۃ اللہ علیہ، پیشگوئی بہت کم کرتے ہیں۔ شیخ المکرم اس بات کی اطلاع بارہا دے چکے ہیں کہ

"نفاذ اسلام وطن عزیز کا مقدر ہے،
یہ کام ہوکر رہے گا، کوئی روک سکے تو روک لے "

یہ الفاظ پاکستان کے طول و عرض میں گونجے اور اب ہر آنے والے وقت میں مغربی جمہوریت اور جمہوری جماعتوں سے مایوسی اور اسلام پسندی اس بات کی نشاندہی کررہی ہے کہ وہ وقت بہت قریب ہے کہ پاکستان میں نفاذ اسلام ہوجائے گا۔

ایک موقع پہ شیخ المکرم  حضرت مولانا محمد اکرم اعوان رحمۃ اللہ علیہ نے فرمایا۔

"امریکہ کی باون ریاستوں کا اتحاد ٹوٹ جائے گا
امریکہ کی ہر گلی میں سیاہ فام اور سفید فام کی لڑائی ہوگی۔ امریکہ نام صرف تاریخ میں رہ جائے گا
"

ایک اور موقع پہ شیخ المکرم حضرت مولانا محمد اکرم اعوان رحمۃ اللہ علیہ نے فرمایا۔

"بین الاقوامی Senareo جو بن رہا ہے، اقوام عالم کے روئیے اور جس طرح کفر اکٹھا ہورہا ہے،
اسلام کے خلاف اقدامات کئے جارہے ہیں۔ اب تو یہ لگتا ہے کہ اس، غزوۃ الہند کے سوا کوئی راستہ ہی نہیں ہے۔
جو لوگ نہیں مانتے تھے اب وہ بھی کہتے ہیں کہ اب یہی راستہ ہے تو آج نئی خبر آپ کو دے دیں کہ
الحمدللہ ۔۔۔ اس غزوۃ الہند کی بنیاد رکھ دی گئی ہے۔ اس پہ کتنا وقت لگے گا یہ اللہ تعالی بہترجانتے ہیں”

22 نومبر 2015 کوہ نور ٹی وی، پروگرام المرشد

ایک اور موقع پہ شیخ المکرم حضرت مولانا محمد اکرم اعوان رحمۃ اللہ علیہ نے فرمایا۔

"بدکار اسلام کی نشاۃ ثانیہ کا سبب نہیں ہوں گے۔
بدکاروں کے پاس حکومتیں اور سلطنتیں تو ہوسکتی ہیں،
لیکن دین کی خدمت کا کام اللہ دین داروں سے ہی لیتا ہے”

حضرت مولانا محمد اکرم اعوان رحمۃ اللہ علیہ کے شاگرد اور صاحب مجاز، روس شکن، کرنل امام،  امیر سلطان تارڑ شہید رحمۃ اللہ علیہ نے موجودہ حالات کے بارے میں فرمایا تھا۔

"سالوں میں ہونے والے کام ہفتوں میں اور مہینوں میں ہونے والے کام دنوں میں ہورہے ہیں،
نفاذاسلام کا وقت بہت تیزی سے قریب آرہا ہے”

ترتیب از : میاں قاسم صحرائی

error: Content is protected !!